ہر ہر مودی،گھر گھر مودی،اس بار گجرات میں بے گھر ہوجاتے؛مایاوتی

لکھنؤ: بہوجن سماج پارٹی (بی پی ایس) کی سپرمو میووتی نے پیرس (15 جنوری) کو ایک پریس کانفرنس میں بتایا کہ پارٹی میری سالگرہ پر سماجی خدمت کرتا ہے. بی ایس ایس ایک واحد جماعت ہے جس کا دلت، قبائلیوں اور مسلمانوں کا خیال رکھا جانتا ہے. انہوں نے کہا، ‘پہلے بی جے پی اور اب کانگریس بی پی ایس کو ختم کرنا چاہتا ہے. اس وجہ سے وہ امبڈرکر کا نام نہیں بھولتے.

مایاوتی نے کانگریس سے گفتگو میں پوچھا، ‘بابا سعاب نے کیوں بار بار استعفی دینا ہوگا. اگر کانگریس نے بھارت راھن کانگریس کو کانگریس کو کیوں نہیں دیا تو وہ ان کے لئے اتنا پیار کیوں نہیں رکھتے تھے؟
اس کے بعد، مایوتاتی نے ایک بار پھر بی جے پی پر حملہ کیا. انہوں نے کہا، “بی جے پی نے منڈل کمیشن کی مخالفت کی تھی. خطاب کرتے ہوئے، بی جے پی نے ریسکیو غیر فعال کردیا ہے. “انہوں نے کہا کہ، بی ایس پی ہر ایک پر لڑا ہے. بی جے پی اور آر ایس ایس ہر قسم کے گندے کام کو اپنانے کے لۓ ہیں.
ای وی ایم کے مسئلے پر، انہوں نے کہا، “ای وی ایمز میں بڑی پریشانیاں کرکے اتر پردیش اور اتھارھن میں انتخابات جیت گئی ہیں. یہ لوک سبھا انتخابات میں بھی کیا گیا تھا. “انہوں نے کہا کہ، بعد میں مجھے بھی ریاستی سبھا میں بات نہیں کرنا پڑا. مجھے مجبوری میں استعفی کرنا پڑا تاکہ میں پورے ملک میں کھلی لڑائی سے لڑ سکے.
سابق وزیر اعلی کے وزیر اعلی، ایک بار پھر پی پی مودی کو نشانہ بناتے ہوئے کہا، “گجرات میں مودی بے گھر ہو جائے گی. کیونکہ دلائل کی تعداد بہت کم ہے. دوسری صورت میں، مودی، جو گھر سے گھر میں بات کرتے ہیں، اس وقت گجرات میں بے گھر ہوجائے گی.
ان کی بات چیت کے ذریعے، بی ایس پی سرکو نے بابا صاحب کے ساتھ خود کو موازنہ کرنے کی کوشش کی. انہوں نے باباہیب کے استعفی کے ساتھ 1951 میں اپنے ریاستی اسمبلی سے استعفے کا اظہار کیا. اس پورے پریس کانفرنس میں مایوتاتی نے خود کو امبیرکر کے برابر رکھنے کی کوشش کی.
مایا نے کہا، “مودی کی حکومت کی ترقی نازل ہوئی ہے. مودی نے اکثریت لوگوں کو رہنے کے لئے مشکل رکھی ہے. یہ حکومتیں اب آئینی فورسز کو برباد کرنا چاہتے ہیں. وزیر کا کہنا ہے کہ آئین کو تبدیل کردیا جائے گا لیکن اسے برباد نہیں کیا گیا ہے. بی جے پی کو کتنا بگاڑ دیا جائے گا ہر کوئی اس طرح کی سوچ ہے. “انہوں نے کہا، مودی حکومت یعنی آر ایس ایس حکومت. یہ حکومت ہر جمہوری ادارے کو برباد کرنا چاہتا ہے.
سابق وزیر اعلی کے وزیر اعلی نے اس معاملے پر سپریم کورٹ کے ججوں پر اس تنازعات پر کہا کہ اب عدلیہ چڑھ چکا ہے.

About Sub Editor