چیف الیکشن کمشنر نے مودی کا چکایا احسان: بھارددھاج

نئی دہلی. الیکشن کمیشن کی طرف سے فائدہ کے عہدے کے معاملے میں عام آدمی پارٹی کے 20 ممبران اسمبلی کو نااہل ٹھہرائے جانے کی سفارش صدر رام ناتھ كوند کو بھیجی جانے سے متعلق میڈیا رپورٹس پر پارٹی ممبر اسمبلی سوربھ بھارددھاج نے سخت ردعمل ظاہر کیا ہے. بھارددھاج نے اس پر چیف الیکشن کمشنر اے کے جیوتی پر شدید حملہ کرتے ہوئے الزام لگایا کہ وہ ایسا کرکے وزیر اعظم نریندر مودی کا احسان چکا رہے ہیں.

انہوں نے کہا کہ جییوتی گجرات کیڈر کے اآئی ایس افسر ہیں. وہ 23 جنوری کو چیف الیکشن کمشنر کے عہدے سے ریٹائر ہو رہے ہیں. انہوں نے ایک بار پارٹی کے 20 ایم ایل اے پارٹی پارٹی کے حق کو سننے کی کوشش نہیں کی. وہ چیف الیکشن کمشنر بنائے جانے کے لئے وزیر اعظم نریندر مودی کا احسان چکا رہے ہیں.
اسی دوران پارٹی کے ایک سینئر لیڈر آشوتوش نے اپنے توئیٹ کے ذریعے چیف الیکشن کمیشن پر الزام عاید کیا ہے کہ انکو اتنا نہیں گرنا چاہئے کہ وزیر اعظم مودی کا لیٹر باکس بن گئے ہیں۔

سچ تو یہ ہے کہ آپ کے جن ممبران اسمبلی کو فائدہ کے عہدے لینے کا مجرم سمجھا جا رہا ہے انہوں نے نہ تو کوئی فائدہ کا عہدہ لیا، نہ ایک روپیہ لیا اور نہ ہی کوئی گاڑی لی. الیکشن کمیشن نے منافع کے عہدے کے معاملے میں آپ کو کے 20 ممبران اسمبلی کے بارے میں اپنی سفارشات صدر کو بھیج دی ہیں. ایسا مانا جا رہا ہے کہ جس کمیشن نے ان اراکین اسمبلی کو اسمبلی کی رکنیت کے نااہل قرار دیا ہے.
دریں اثنا کانگریس اور بھارتیہ جنتا پارٹی نے کیجریوال سے استعفی طلب کیا ہے۔

About Sub Editor