غزہ تشدد کی آزادانہ تحقیقات کامطالبہ:عرب لیگ

 عرب لیگ نے قاہرہ میں ہونے والے اجلاس میں فلسطین کے علاقے غزہ میں 30 مارچ کو’یوم الارض‘ ریلیوں پر اسرائیلی فوج کے وحشیانہ تشدد کی شدید مذمت کی ہے۔ عرب لیگ نے عالمی عدالت انصاف پر زور دیا ہے کہ وہ غزہ میں اسرائیلی فوج کے ہاتھوں وحشیانہ تشدد اور ہلاکتوں کی آزادانہ تحقیقات کرائے۔ذرائع کے مطابق کل قاہرہ میں ہونیوالے عرب لیگ کے اجلاس میں باور کرایا گیا کہ فلسطینی قوم کو اپنے حقوق کیحصول کے لیے ہرطرح کی جدو جہد کا حق ہے۔ دیگر ذرائع کے ساتھ ساتھ فلسطینی اپنے حقوق کے حصول کے لیے پرامن احتجاج کا بھی حق رکھتیہیں اور یہ حق انہیں عالمی اداروں کی طرف سے دیا گیا ہے۔اجلاس کے بعد جاری کردہ بیان میں کہا گیا ہے کہ غزہ میں نہتیمظاہرین کا قتل عام سنگین جرم ہے اور عالمی عدالت سمیت دیگر عالمی اداروں کے اس قتل عام اور خون خرابے کی تحقیقات کے لیے فوری اقدامات کرنا چاہئیں۔اعلامیہ میں عالمی سلامتی کونسل پر بھی زور دیا کہ وہ فلسطین سے متعلق منظور کردہ قراردادوں بالخصوص، قرار داد 904 مجریہ 1994ئ￿ ، قرار داد 605 مجریہ 1987 پر عمل درآمد کو یقینی بنائے۔ ان قراردادوں میں نہتے فلسطینیوں کو تحفظ دلانے اور چوتھے جنیوا معاہدے کے تحت انہیں ان کے حقوق فراہم کرنے پر زور دیا گیا ہے۔

About Sub Editor