گوگل گلاس پہن کر ہندوستانی ڈاکٹر نے کی سرجری

 یہاں کے ایک ڈاکٹر نے گوگل کا خاص شیشے گوگل گلاس پہن کر دو مریضوں کی منگل کو سرجری کی. گمےٹےڈ ريلٹي ٹیکنالوجی پر مبنی اس چشمے کا استعمال کرتے ہوئے آپریشن google-glassکرنے کا یہ بھارت میں اپنے قسم کا پہلا معاملہ ہے.

لاپھلان اسپتال کے چیئرمین اور لےپروسكوپي سرجن ڈاکٹر جےایس پرنس نے ایک 45 سالہ امریکی خاتون کی پوسٹ بیرياٹك هارنيا سرجری کی. اس کے علاوہ هيٹبرن کے مسئلہ سے شکار ایک دوسرے مریض کی اینٹی رپھلےكس سرجری کی گئی. پورے آپریشن عمل کی لائیو سٹریمنگ کی گئی، تاکہ لوگ ڈاکٹر کے کام کو دیکھ سکیں. ڈاکٹر راج کمار نے بتایا کہ دونوں ہی مریض بالکل ٹھیک – ٹھاک ہیں اور آپریشن کے دوران کسی بھی پروٹوکول کی خلاف ورزی نہیں کی گئی.

آپریشن کے دوران ڈاکٹر اپنے طالب علموں سے مسلسل بات چیت کر انہیں آپریشن کی معلومات دے رہے تھے. سٹوڈنٹس آپریشن تھیٹر کے باہر دوسرے کمرے میں مکمل سرجری کو لائیو دیکھ رہے تھے. ڈاکٹر نے بتایا کہ ان کا اسپتال ہمیشہ سے لیٹیسٹ ٹیكنلوجي کے استعمال کے معاملے میں آگے رہا ہے. یہ آپریشن بھی اسی کی مثال ہے. اگرچہ اس آپریشن کے دوران وہ تھوڑا نروس تھے ، یہ بات انہوں نے خود قبول کی.

انہوں نے کہا کہ یہ ٹرائل تھا ، اب آنے والے دنوں اور سرجری میں اس ٹیکنالوجی کی مدد لی جائے گی. ڈاکٹر راج کمار اس تکنیک کو گیم چینجر بتا رہے ہیں، ان کے مطابق اس تکنالوجی سے کافی شفافیت آئے گی. ڈاکٹر راج کمار نے بتایا کہ اس آپریشن کو گوگل هےگٹ کے ذریعہ بھی لائیو پیش کیا گیا ہے. لوگ جاننا چاہتے ہیں کہ آخر آپریشن تھیٹر میں کیا ہو رہا ہے ؟ گوگل گلاس میڈیکل سٹوڈنٹس کے لئے بہت اچھا ٹول ثابت ہو سکتا ہے. سٹوڈنٹس اپنے سینئر ڈاکٹر کے آپریشن کے عمل کو دیکھ سکتے ہیں اور اس کو سیکھ سکتے ہیں. ڈاکٹر کا ​​یہ بھی ماننا ہے کہ گوگل گلاس ایجوکیشنل ٹولز کے علاوہ دیگر تکنیکی چیزوں جیسے ایکس رے، ایم آر آئی امیج وغیرہ میں مددگار ثابت ہو سکتا ہے.

گوگل گلاس ہے خاص : گوگل گلاس ایک شیشے کی طرح پہننے والی آلہ ہے. اسے آپ صوتی کمانڈ کے ذریعے کنٹرول کر سکتے ہیں. گوگل گلاس کے ذریعے آپ تصویر اور ویڈیو بھی بنا سکتے ہیں. ان ویڈیوز کو فوری طور پر انٹرنیٹ پر ڈالا جا سکتا ہے.

About Sub Editor